سائن اِن   |   رکنیت براے بلاگ

فروغ امن کے لیے نوجوانوں کی شمولیت اور استعداد کاری

 

پس منظر

آج دنیا کا ہر چالیسواں انسان پاکستانی ہے۔ پاکستان دنیا کے ان ممالک میں سے ہے جہاں اسوقت 30سال کے کم عمر افراد کی تعداد ملک کی کل آبادی کا 67% حصہ ہیں ۔ دوسرے الفاظ میں صرف پاکستانی نوجوان کی تعداد دنیا کے اس ملک کے برابر ہے جو آبادی کے اعتبار سے دنیا کا بارہواں بڑا ملک ہے۔ معاشی طور پر غیر مستحکم پاکستان میں ایسے نوجوان جہاں بیروزگاری کا شکار ہیں وہیں ان کے پاس اپنی بھرپور توانائیوں کو صرف کرنے کے انتہائی محدود مواقع میسر ہیں۔ مذہبی جنونیت، سماجی پہچان، لسانی تفرقات اور سیاسی بالیدگی کی کمی جیسے مسائل نوجوانوں میں قوت برداشت، رواداری، مہارتوں کا حصول، اور باہمی رفاقت جیسے عناصر کو شدت کے ساتھ متاثر کر رہے ہیں۔ جنوبی پنجاب پاکستان کے ان علاقوں میں سے ایک ہے جہاں برادری سسٹم، اعلی تعلیم کے لیے قلیل ادارے، محدود صنعتی ترقی، اور مذہب کی طرف بنیاد پرستانہ رویہ نوجوانوں کے لیے بڑے مسائل پیدا کر رہے ہیں۔ جنوبی پنجاب میں بے روزگاری کی شرح اس لیے بھی زیادہ ہے کہ وہاں کے نوجوان فنی تعلیم میں اتنے ماہر نہیں ہیں جتنے پنجاب کے دوسرے بڑے شہروں کے نوجوان۔ پنجاب ٹیکنیکل اینڈ ووکیششنل ٹریننگ اتھارٹی کے مختلف اداروں میں سب سے کم اندراج جنوبی پنجاب کے نوجوانوں کا ہے۔ جیسا کہ سال 2013-14 میں ضلع ملتان TEVTAمیں کل لوگوں کا انداج 4881، ضلع بہاولپور میں 3316، ضلع مظفر گڑھ میں 696، اور ضلع لودھراں میں صرف 380رہا ہے۔ ان حالات میں برگد ادارہ برائے ترقی نوجوانان نے جنوبی پنجاب کے چار اضلاع(ملتان، بہاولپور، لودھراں اور مظفر گڑھ) میں ایک ایسا پروگرام تیار کیا جو جنوبی پنجاب کے ان چار اضلاع میں نوجوانوں کے لیے شمولیت اور روزگار کے متبادل ذرائع مہیا کرے گا ۔ان متبادل ذرائع سے نوجوانوں کے اندر تعمیری سرگرمیوں کو سرانجام دینے کا رواج پروان چڑھے گا۔روزگار کے متبادل ذرائع پنجاب حکومت کی طرف سے پیش کردہ مہارتوں کے ساتھ جڑے ہوئے ہیں اور جنوبی پنجاب میں نوجوان ضروری مہارتوں بارے معلومات اور ان کے حصول کے بعد معاشی طور پر خود انحصار بن سکتے ہیں۔

 

اغراض ومقاصد

اس پروگرام کے مقاصد میں جنوبی پنجاب کے چار اضلاع میں تعمیری و ترقی کے کاموں میں نوجوانوں کی شمولیت کے متبادل ذرائع مہیا کرنا اور روزگار کے مواقعوں کے بہتر حصول کے لیے نجی و سرکاری ا ور غیر سرکاری ادارہ جات کے ساتھ رابطہ سازی کرنا شامل ہیں۔

 

منصوبے کے تحت کی جانے والی اہم سرگرمیاں

برگد اس پروگرام کے تحت نجی و سرکاری اور غیر سرکاری اداروں کیساتھ باقاعدہ نیٹ ورکنگ کرتے ہوئے جانکاری،رابطہ سازی، تربیت اور استعداد کاری کے ذریعے نوجوانوں اور ان کے مستقبل کے ساتھ جڑے ہوئے اداروں کے ساتھ ملکر پروگرا م کی کامیابی کو یقینی بنائے گا۔
پروگرام کی چند اہم سرگرمیاں درج ذیل ہیں۔
۔ تین روزہ پلاننگ میٹنگ کا انعقاد
۔ محکمہ تعلیم پنجاب اور پنجاب ٹیکنیکل اینڈ ووکیشنل اتھارٹی کے ساتھ MoUs
۔ 510فعال اور سرگرم مقامی نوجوانو ں کی تربیت اور استعداد کاری ۔
۔ 80 اداروں کے160مرد و خواتین نوجوان سرپرستوں کی تربیت اور استعداد کاری ۔
۔ 320 طلبا وطالبات کی تربیت اور استعداد کاری
۔ تربیتی کورس بمعہ کتابچہ کی تیاری
۔ جنوبی پنجاب میں خواندہ یوتھ کی شمولیت سے20 امن کمیٹیوں کا اجراء
۔ تربیت یافتہ افراد کی بدولت مزید100 تربیتی پروگرامز کا انعقاد
۔ فنی تعلیمی اداروں میں مقامی نوجوانوں کے داخلہ جات کے رجحان کے فروغ کے لئے مختلف سرگرمیوں کا انعقاد
۔ 200مقامی طلبا کے ساتھ لاہور کے مختلف اہم مقامات اور تعلیمی اداروں کا دورہ جات
۔ فنی تعلیمی اداروں کے سربراہان و اساتذہ کرام کے ذریعے جنوبی پنجاب کے 7000نوجوانوں تک فنی تعلیم کی اہمیت بارے شعور پیدا کرنے کے لیے براہ راست رابطہ سازی
۔ مقامی نوجوانوں تک انٹرن شپ اور روزگار بارے دستیاب معلومات کی آسان رسائی
۔ چار اضلاع کے لیے فنی تعلیم میں زیادہ سے زیادہ نوجوان افراد کی شمولیت کو یقینی بنانے کے لیے حکمت عملی وضع کرنا
۔ نوجوانوں کے لیے میسر ملکی و غیر ملکی وظیفہ جات کے حصول بارے معلومات و راہنمائی
۔ پروگرام بارے معلوماتی مواد کی تقسیم
۔ نوجوانوں کے لیے اردو ویب سائٹ کا اجراء
۔ 2500نوجوانوں کے ساتھ جاب فیسٹیول